لڑکے اور لڑکیوں کی شادی میں دیری کا بڑھتا ھوا خطرناک رجحان

لڑکے اور لڑکیوں کی شادی میں دیری کا بڑھتا ھوا خطرناک رجحان 👌 ایک لمحۂ فکریہ👌

آج سے تقریبًا پندرہ سال پہلے معاشرے کا جو رجحان تھا، اس کے مطابق جس لڑکی کی شادی پچیس سال کی عمر سے پہلے کر دی جاتی، تو ایسی شادی کو بروقت گردانا جاتا۔ پچیس سال کی عمر کا ھندسہ عبور کرنے کا یہ مطلب لیا جاتا کہ لڑکی کے رشتہ میں دیر ھو گئی ھے.....

♢♢اس سے پہلے کا معلوم نہیں لیکن ھو سکتا ھے کہ دیری کا یہ پیمانہ تین چار سال پہلے تصور کیا جاتا ھو...

پھر سات آٹھ سال پہلے یہ صورتحال ھوئی کہ تیس سال کی عمر سے پہلے پہلے لڑکی کی شادی بروقت قرار دئے جانے لگی۔ یعنی محض سات آٹھ سال میں پانچ سال کا فرق آ گیا۔

اب بھی ایسے معاملات ھیں کہ اکثر گھروں میں لڑکیوں کی عمریں تیس سے چالیس سال کے درمیان ھو چکی ھیں لیکن رشتہ " ندارد "۔

یہ رشتہ میں دیری کا رجحان ھمارے معاشرے میں ایسی خاموش دراڑیں ڈال رھا ھے جو معاشرتی ڈھانچے کے زمین بوس ھو…

Read more
  • 0

How to be a good Husband

How to be a good Husband “You can’t control your wife’s actions, but work on you and trust the rest will take care of itself. ” What are the qualities of a good husband?  to keep your marriage happy and healthy, as a result: Develop a moral compass. Believe in yourself. Know yourself. Know your wife. Be a student of love. Be a teacher of love. Develop your emotional vocabulary. Prioritize the relationship.  
Read more
  • 0